Pakistan News – Axact fake degree case: Judge confesses to receiving Rs 5m bribe

0
164
PAKISTAN-CRIME-AXACT
Pakistani CEO of software company Axact Shoaib Ahmed Shaikh (C) is escorted by Pakistan's Federal Investigation Agency (FIA) personnel as he appears at a court in Karachi on June 8, 2015. Pakistani investigators arrested the head of a firm accused of running a global fake degree empire and conducted fresh raids at the company's Karachi headquarters where they discovered thousands of blank diplomas. AFP PHOTO / Rizwan TABASSUM

Image result for Axact

ایگزیکٹ جعلی ڈگری سکینڈل، ملزم شعیب شیخ اور دیگر کو پچاس لاکھ روپے رشوت لے کر بری کرنے کا الزام، اسلام آباد کا سیشن جج معطل، 14 دن میں وضاحت طلب، پرویز القادر نے شوکاز نوٹس ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا۔

اسلام آباد: (دنیا نیوز) ایگزیکٹ جعلی ڈگری سکینڈل میں ایک اور مبینہ سکینڈل سامنے آ گیا۔ جج پر ملزم شعیب شیخ اور دیگر کو رشوت لے کر بری کرنے کا الزام لگایا گیا ہے۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایڈیشنل سیشن جج پرویز القادر میمن کو معطل کر دیا۔ ایڈیشنل سیشن جج پرویز القادر میمن کی معطلی کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوکری سے پرویز القادر کو برخاست کرنے کا شوکاز نوٹس بھی جاری کر دیا۔ پرویز القادر میمن کی معطلی کا نوٹیفکیشن 7 جون جبکہ شوکاز نوٹس 9 جون کو جاری ہوا۔ ایڈیشنل سیشن جج سے ملزمان کو 50 لاکھ روپے رشوت لے کر بری کرنے کے الزام پر 14 دن میں وضاحت طلب کی گئی ہے۔ شوکاز نوٹس میں کہا گیا ہے کہ جواب نہ دینے کی صورت میں یک طرفہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

پرویز القادر نے شعیب شیخ سمیت دیگر ملزمان کو 31 اکتوبر 2016ء کو بری کیا تھا۔ پرویز القادر میمن کو نوکری سے برخاست کرنے کی سفارش ڈیپارٹمنٹل پروموشن کمیٹی نے کی ہے۔ ایڈیشنل سیشن جج پرویز القادر میمن نے شوکاز نوٹس کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا ہے۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق جمعہ کو درخواست کی سماعت کریں گے۔

 

 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here